افغان صدر کی عقل ٹھکانے آگئی، پاکستان سےکیا درخواست کر دی؟

پر امن تعلقات ہمارا قومی ایجنڈا، پاکستان کیساتھ بہتر تعلقات کے خواہاں ہیں، افغانستان کے صدر اشرف غنی نے عید الاضحیٰ کے موقع پر اپنے پیغام میں کشیدہ تعلقات کے خاتمے کے لیے پاکستان کو ‘جامع مذاکرات کی پیشکش کردی۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق افغان صدر نے عیدالاضحی کے موقع پر اپنے پیغام میں کشیدہ تعلقات کے خاتمے کیلئے پاکستان کو جامع مذاکرات کی پیش کی ہے۔ اپنے پیغام میں اشرف غنی کا کہنا تھا کہ ‘پاکستان کے ساتھ پر امن تعلقات ہمارا قومی ایجنڈہ ہے، اور ہمسایہ ملک کے ساتھ بہتر تعلقات کے خواہاں ہیں انہوںنے عسکریت پسندوں پر ہتھیار ڈالنے پربھی زور دیاہے۔واضح رہے کہ رواں برس جون میں کابل میں افغانستان کے حوالے سے ہونے والی بین الاقوامی امن کانفرنس کے دوران اشرف غنی نے پاکستان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ وہ ان کے ملک کے خلاف ’غیر اعلانیہ جنگ‘ مسلط کر رہا ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ’پاکستان کو اس بات پر کس طرح قائل کیا جاسکتا ہے کہ ایک مستحکم افغانستان، اسے اور اس خطے کو مدد فراہم کرے گا۔خیال رہے کہ پاکستان اور افغانستان کو علیحدہ کرنے والی سرحد ‘دیورنڈ لائن بھی پاکستان اور افغانستان کے درمیان تنازع کا باعث ہے، برطانیہ کی بنائی ہوئی تقریباً ایک صدی پرانی اس سرحد کو دنیا بطور عالمی سرحد کے تسلیم کرچکی ہے مگر افغانستان یہ حقیقت تسلیم کرنے سے اب تک گریزاں ہے۔

Play online Games

اپنا تبصرہ بھیجیں